Daanish se Mukaalma

Daanish sy Mukalma دانش سے مکالمہ

5.00 out of 5 based on 1 customer rating
(1 customer review)

$ 20

Sajawal Khan Ranjha

Product Description

ہر زندگی، خواہ وہ فرد کی ہو یا قوم کی، وقت کے ایک خاص دورانیے کے بعد ایک خاص ڈھرے پر چلنے کی عادی ہو جاتی ہے اور رفتہ رفتہ یہی اندازِ زیست اس کے لیے تقدس حاصل کر لیتا ہے۔ اس تقدس کی چھان پھٹک ضروری ہوتی ہے، تاکہ اصل کو فرع سے، اہم کو غیر اہم سے اور اصول کو فضول سے دور رکھا جا سکے۔ سجاول خان رانجھا نے ان مکالمات میں یہی فریضہ سرانجام دینے کی کوشش کی ہے۔ اس مقصد کے لیے انھوں نے معاصر عہد کی ایسی شخصیات کو منتخب کیاہے جن کی دلچسپیاں متنوع اور وابستگی مختلف شعبہ ہائے حیات سےہے۔ اور جو اپنےاپنے شعبے میں اختصاص رکھتے ہیں اور اس بارے میں غور و فکر کے عادی ہیں۔ اس نیرنگی نے کتاب کے مندرجات کو ہر قسم کا ذوق رکھنے والےقارئین کے لیے دلچسپی کا سامان بنا دیا ہے۔
ڈاکٹر نجیبہ عارف

دانش سے مکالمہ کرنے کا حوصلہ اور صلاحیت بذات خود دانش مندی کی متقاضی ہے۔ اچھا سوال آدھا جواب تو ہوتا ہی ہے، اچھے جواب کے امکان میں اضافہ کا سبب بھی۔ سچ تو یہ ہے کہ سوال کرنے والے کے پاس کسی بھی علمی مکالمہ کو آگے بڑھانے کے لیے سوال کی صورت میں کم ترین الفاظ کے استعمال کی گنجائش ہوتی ہے، لہٰذا ایک سطح پہ اسکا کام زیادہ مشکل ہوتا ہے۔اس کتاب میں پیش کئے جانے والے مصاحبوں میں سوالات کا معیار ہی جواباً آنے والی دانش کا محرک رہا ہے۔ زمین و آسمان سے لےکر سیاسی ، ادبی و الہیاتی موضوعات تک اور سائنس و ٹکنالوجی سے روحانیات و تصوف تک ہر عنوان سے اس کتاب میںموجود اہل علم کے افکار قاری کے ذہن کی زرخیزی میں اضافہ کا سبب بنیں گے۔ہر سطح اور مزاج کے قارئین کے لیے اس کتاب میں دلچسپی کا اتنا سامان ہے کہ تفکر و تدبر کی کئی منزلیں سرہو سکتی ہیں۔

کسی بھی نظریاتی، صنفی یا گروہی تعصب سے ماورا، اہل دانش کا یہ انتخاب بجائے خود دانش مندی اور بلند حوصلگی کی نشانی ہے۔
آئیے اس علمی سفر کا آغاز کرتے ہیں، مطالعہ شروع کرتے ہیں۔
شاہد اعوان

1 review for Daanish sy Mukalma دانش سے مکالمہ

Add a review